نور سے ان کے ہوا سارا زمانہ نوری

نور سے ان کے ہوا سارا زمانہ نوری

نور سے ان کے ہوا سارا زمانہ نوری
سید منظر میاں چشتی

ہم نہیں کہتے کہ ہے صرف مدینہ نوری
نور سے ان کے ہوا سارا زمانہ نوری

پیرہن نور، بدن نور ہے اسما نوری
ان سے پہلے کہیں دیکھا نہیں ایسا نوری

ویسے کالے کو کوئی نور نہیں کہتا ہے
ان کے گیسو کو مگر کہنا پڑے گا نوری

دست و پا نور ہیں آقا کے تو حیرت کیا ہے
سینۂ سنگ پہ ہے نقشِ کف پا نوری

وہ بشر ہیں مرا ایمان ہے اس پر لیکن
خاکی ہوکر بھی ہیں سرکار سراپا نوری

قول حسان سے ثابت ہے کہ تم نے رب سے
جیسا چاہا تمہیں ویسا ہی بنایا نوری

دیکھنا ہوتا ہے جب مجھ کو مدینہ منظٓر
آنسوؤں سے میں بنا لیتا ہوں نقشہ نوری

سید منظر میاں چشتی

پھپھوند شریف یوپی ہند

مزید پڑھیں

نعت رسول مقبول ﷺ

ذکر کیجے سیدِ ابرار کا

حضور بخشیں حیا کی بارش

Spread The Love
Share on facebook
Share on twitter
Share on whatsapp
Share on email
Share on print

Leave a Comment

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Related Posts

وضوء کے مستحبات
آپ کے مسائل

وضوء کے مستحبات

وضوء کے مستحبات قسط:3 سلسلہ فہمِ دین بہت سے مستحبات ضمناً اوپر ( قسط نمبر 2میں وضوء کی سنتوں میں ) ذکر ہوچکے، بعض باقی

Read More »
شب قدر کی اہمیت و فضیلت
آپ کے مسائل

شب قدر کی اہمیت و فضیلت

شب قدر کی اہمیت و فضیلت مولانا محمد شمیم احمدنوری مصباحی یہ بات شریعت اسلامیہ کے مسلمات میں سے ہے کہ اللہ وحدہٗ لاشریک نے

Read More »