حافظ ملت اے علم وفضل کے کوہ گراں

حافظ ملت اے علم وفضل کے کوہ گراں

Table of Contents

منقبت درشان حضورحافظ ملت علیہ الرحمہ

رشحات قلم : واصف رضا واصف

حافظ ملت اے علم وفضل کے کوہ گراں
حافظ ملت اے علم وفضل کے کوہ گراں

حافظ ملت اے علم وفضل کے کوہ گراں
زندگی تیری ہے تابندہ مثال کہکشاں

نرم خو ہو ازپۓ عشاق جان عالمیں
سیف براں ہو براے شاتم فخر زماں

پارساٸی سے عبارت ہے کتاب زندگی
تیرےتقوے کی مثالیں پیش کرتاہے جہاں

دھوم ہے آفاق میں تیرےکمال وفضل کا
نیر اقبال تیرا کو بہ کو ہے ضوفشاں

ہے نزول شبنم لطف و کرم شام وسحر
ہےبہاروں کے احاطےمیں عزیزی گلستاں

ذکر تیرا ہے علاج کرب و غمہاے دروں
یاد تیری ہے یقینا باعث تسکین جاں

ہے نچھاور تیری تربت پرگل عشق ووفا
زندہ آباد اے دین محبوب خداکے پاسباں

ہرگھڑی حاصل ہے تیرے لطف ورحمت کاحصار
دور از افتاد ہے واصف رضا کا آشیاں

رشحات قلم
واصف رضا واصف مدھوبنی بہار

مزید پڑھیں:

منقبت درشان حضور حافظ ملت علیہ الرحمہ

مرادآباد سے تشریف لاے حافظ ملت 

منقبت درشان اعلی حضرت علیہ الرحمہ

Like this article?

Share on Facebook
Share on Twitter
Share on Whatsapp
Share on E-mail
Share on Linkedin
Print (create PDF)

Leave a comment